Ticker

6/recent/ticker-posts

Muhabbat Poetry in Urdu

John Elia's often express contemplation and despair and draw inspiration from different aspects of human life. Elia's contributions to Urdu poetry are lauded for their profundity and emotional resonance, making Elia an enduring name among poets.

Poetry in Urdu 2 Lines

John Elia Poetry in Urdu


ایذا دہی کی داد جو پاتا رہا ہوں میں

ایذا دہی کی داد جو پاتا رہا ہوں میں 
ہر ناز آفریں کو ستاتا رہا ہوں میں 

اے خوش خرام پاؤں کے چھالے تو گن ذرا 
تجھ کو کہاں کہاں نہ پھراتا رہا ہوں میں 

اک حسن بے مثال کی تمثیل کے لیے 
پرچھائیوں پہ رنگ گراتا رہا ہوں میں 

کیا مل گیا ضمیر ہنر بیچ کر مجھے 
اتنا کہ صرف کام چلاتا رہا ہوں میں 

روحوں کے پردہ پوش گناہوں سے بے خبر 
جسموں کی نیکیاں ہی گناتا رہا ہوں میں 

تجھ کو خبر نہیں کہ ترا کرب دیکھ کر 
اکثر ترا مذاق اڑاتا رہا ہوں میں 

شاید مجھے کسی سے محبت نہیں ہوئی 
لیکن یقین سب کو دلاتا رہا ہوں میں 

اک سطر بھی کبھی نہ لکھی میں نے تیرے نام 
پاگل تجھی کو یاد بھی آتا رہا ہوں میں 

جس دن سے اعتماد میں آیا ترا شباب 
اس دن سے تجھ پہ ظلم ہی ڈھاتا رہا ہوں میں 

اپنا مثالیہ مجھے اب تک نہ مل سکا 
ذروں کو آفتاب بناتا رہا ہوں میں 

بیدار کر کے تیرے بدن کی خود آگہی 
تیرے بدن کی عمر گھٹاتا رہا ہوں میں 

کل دوپہر عجیب سی اک بے دلی رہی 
بس تیلیاں جلا کے بجھاتا رہا ہوں میں 


Iza Dahi Ki Dad Jo Pata Raha Hun Main


aeza dahi ki daad jo paata raha hon mein
har naz afreen ko satata raha hon mein

ae khush Khiraam paon ke chhalay to gun zara
tujh ko kahan kahan nah پھراتا raha hon mein

ik husn be misaal ki tamseel ke liye
parchaiyun pay rang girata raha hon mein

kya mil gaya zameer hunar beech kar mujhe
itna ke sirf kaam chalata raha hon mein

roohon ke parda posh gunaaho se be khabar
jismon ki naikian hi گناتا raha hon mein

tujh ko khabar nahi ke tra karb dekh kar
aksar tra mazaaq urata raha hon mein

shayad mujhe kisi se mohabbat nahi hui
lekin yaqeen sab ko dilaata raha hon mein

ik satar bhi kabhi nah likhi mein ne tairay naam
pagal tujhi ko yaad bhi aata raha hon mein

jis din se aetmaad mein aaya tra shabab
is din se tujh pay zulm hi dhaata raha hon mein

apna masaliya mujhe ab tak nah mil saka
zarron ko aftaab banata raha hon mein

bedaar kar ke tairay badan ki khud aagahi
tairay badan ki Umar گھٹاتا raha hon mein

kal dopehar ajeeb si ik be dili rahi
bas teelian jala ke bujhata raha hon mein