Ticker

6/recent/ticker-posts

Yaad Poetry in Urdu

Poetry in Urdu 2 Lines

Allama Iqba Poetry in Urdu


قوموں کے ليے موت ہے مرکز سے جدائي


قوموں کے ليے موت ہے مرکز سے جدائي

 ہو صاحب مرکز تو خودي کيا ہے ، خدائي


! جو فقر ہوا تلخي دوراں کا گلہ مند

 اس فقر ميں باقي ہے ابھي بوئے گدائي


 اس دور ميں بھي مرد خدا کو ہے ميسر

 جو معجزہ پربت کو بنا سکتا ہے رائي


 در معرکہ بے سوز تو ذوقے نتواں يافت

 اے بندئہ مومن تو کجائي ، تو کجائي 


 خورشيد ! سرا پردئہ مشرق سے نکل کر

 پہنا مرے کہسار کو ملبوس حنائي


Qomon ke liye mout hai markaz se judai


qomon ke liye mout hai markaz se judai

ho sahib markaz to khudi kya hai, khudai


! jo fiqr sun-hwa talkhi dauraa ka gilah mand

is fiqr mein baqi hai abhi boye gadai


is daur mein bhi mard kkhuda ko hai muyassar

jo moujza parbat ko bana sakta hai rai


dar maarka be soaz to ذوقے نتواں yaaft

ae بندئہ momin to کجائی, to کجائی


Khurshid ! serra پردئہ mashriq se nikal kar

pehna marey kuhsaar ko malbos hinaa_ii

For More Allama Iqbal Poetry :