Ticker

6/recent/ticker-posts

Deep sad Poetry in Urdu

Poetry in Urdu 2 Lines

John Elia Poetry in Urdu


آپ اپنا غبار تھے ہم تو

آپ اپنا غبار تھے ہم تو
 یاد تھے یادگار تھے ہم تو

 پردگی ہم سے کیوں رکھا پردہ
 تیرے ہی پردہ دار تھے ہم تو

 وقت کی دھوپ میں تمہارے لیے
 شجر سایہ دار تھے ہم تو

 اڑے جاتے ہیں دھول کے مانند
 آندھیوں پر سوار تھے ہم تو

 ہم نے کیوں خود پہ اعتبار کیا
 سخت بے اعتبار تھے ہم تو

 شرم ہے اپنی بار باری کی
 بے سبب بار بار تھے ہم تو

 کیوں ہمیں کر دیا گیا مجبور
 خود ہی بے اختیار تھے ہم تو

 تم نے کیسے بھلا دیا ہم کو
 تم سے ہی مستعار تھے ہم تو

 خوش نہ آیا ہمیں جیے جانا
 لمحے لمحے پہ بار تھے ہم تو

 سہہ بھی لیتے ہمارے طعنوں کو
 جان من جاں نثار تھے ہم تو

 خود کو دوران حال میں اپنے
 بے طرح ناگوار تھے ہم تو

 تم نے ہم کو بھی کر دیا برباد
 نادر روزگار تھے ہم تو

 ہم کو یاروں نے یاد بھی نہ رکھا
 جونؔ یاروں کے یار تھے ہم تو

Aap Apna Gubhar Thay Hum To

aap apna gubhar thay hum to
yaad thay yadgar thay hum to

pardaghi hum se kyun rakha parda
tairay hi parda daar thay hum to

waqt ki dhoop mein tumahray liye
shajar saya daar thay hum to

uray jatay hain dhool ke manind
aandhiyon par sawaar thay hum to

hum ne kyun khud pay aitbaar kya
sakht be aitbaar thay hum to

sharam hai apni baar baari ki
be sabab baar baar thay hum to

kyun hamein kar diya gaya majboor
khud hi be ikhtiyar thay hum to

tum ne kaisay bhala diya hum ko
tum se hi mustaar thay hum to

khush nah aaya hamein jie jana
lamhay lamhay pay baar thay hum to

seh bhi letay hamaray taanon ko
jaan mann jaan Nisar thay hum to

khud ko douran haal mein –apne
be terhan nagawaar thay hum to

tum ne hum ko bhi kar diya barbaad
nadir rozgaar thay hum to

hum ko yaaron ne yaad bhi nah rakha
John yaaron ke yaar thay hum to



For More John Elia Poetry :